بنگلہ دیش کرکٹ ٹیم کو دورہ پاکستان کی دعوت

پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے ملک میں بین الاقوامی کرکٹ کی بحالی کے لیے کوششیں تیز کردی ہیں۔ اس ضمن میں آئندہ اتوار، 5 مارچ کو لاہور میں طے شدہ پاکستان سپر لیگ کے فائنل کو اہم قرار دیا جارہا ہے۔

ذرائع ابلاغ پر گردش کرنے والی خبروں کے مطابق پی سی بی نے دیگر ممالک کے کرکٹ بورڈز سے رابطے شروع کردیئے ہیں اور انہیں پاکستان کی تازہ صورتحال کا جائزہ لینے کی دعوت بھی دی گئی ہے۔ اس ضمن میں پی سی بی کی جانب سے بنگلہ دیش کرکٹ بورڈ (بی سی بی) کو تجویز دی گئی ہے کہ وہ پاکستان سپر لیگ فائنل میں اپنی سیکورٹی ٹیم کو ارسال کرے۔

پاکستان کرکٹ بورڈ رواں سال بنگلہ دیش کرکٹ ٹیم کو سیریز کے لیے مدعو کرنے کا خواہشمند ہے۔ پی سی بی کی خواہش ہے کہ دسمبر 2017 میں بنگلہ دیش کی ٹیم ٹیسٹ، ایک روزہ اور ٹی ٹوئنٹی سیریز کھیلنے کے لیے پاکستان کا دورہ کرے۔

پاکستان کرکٹ ٹیم کو بھی رواں سال جولائی میں بنگلہ دیش کا دورہ کرنا ہے۔ اس دورے میں میزبان ملک کے خلاف 2 ٹیسٹ، 3 ایک روزہ اور 1 ٹی ٹوئنٹی میچ کھیلے جائیں گے۔ پی سی بی کی کوشش ہے کہ اس دورے سے قبل بنگلہ دیش کو بھی پاکستان میں کھیلنے پر رضامند کرلیا جائے۔

اگر بنگلہ دیش کرکٹ بورڈ اس پر رضامندی ظاہر کر بھی دے تو اس بات کی کوئی گارنٹی نہیں کہ وہ اپنا وعدہ وفا بھی کریں گے۔ اس لیے اب دیکھنا یہ ہے کہ آیا پاکستان کرکٹ بورڈ ایک مرتبہ پھر بنگلہ دیش کے وعدے پر بھروسہ کر کے ٹیم روانہ کرتا ہے یا پھر اس مرتبہ کچھ بہتر حکمت عملی اپنائی جائے گی۔

یاد رہے کہ پچھلی مرتبہ اپریل-مئی 2015 میں پاکستان ٹیم نے اس وعدے پر بنگلہ دیش کا دورہ کیا تھا کہ اس کے بعد بنگلہ ٹیم پاکستان کا دورہ کرے گی تاہم ایسا نہیں ہوا۔ سال 2009ء کے بعد سے بنگلہ دیش کرکٹ بورڈ تین مرتبہ پاکستان کا طے شدہ دورہ منسوخ کرچکا ہے۔

فیس بک پر تبصرے



تبصرہ کریں