پاکستان کے لیے مختص حج کوٹے میں اضافہ

پاکستان کے لیے حج کوٹے میں اضافہ کردیا گیا ہے جس کے بعد رواں سال 2017 میں پاکستان سے قریباً 1 لاکھ 80 ہزار افراد حج کی ادائیگی کے لیے سعودی عرب جا سکیں گے۔ یاد رہے کہ 2013 میں پاکستان کے کوٹے میں کمی کردی گئی تھی جس کی وجہ مسجدالحرام میں جاری تعمیر و مرمت کا کام تھا۔

وفاقی وزیر برائے مذہبی امور سردار محمد یوسف نے بتایا کہ سعودی عرب کے ساتھ ایک معاہدہ پر دستخط کرلیے گئے ہیں جس کے بعد پاکستان کا کوٹہ 143368 سے بڑھا کر 179210 کردیا گیا ہے۔ وہ وزیر اعظم نواز شریف کو رواں سال حج انتظامات سے متعلق تفصیلات سے آگاہ کر رہے تھے۔ وزیر اعظم کو بتایا گیا کہ سعودی وزارت حج سے پاکستان کے کوٹہ میں کم از کم 15 ہزار اضافے کی درخواست کی گئی تھی۔

وزیر اعظم نے وزارت مذہبی امور سفارشات کی بھی منظوری دی جس کے تحت پچھلے سات سالوں کے دوران حج کر فریضہ انجام دینے والے افراد سال 2017 میں حکومتی اسکیم سے استفادہ نہیں حاصل کرپائیں۔ اس ضمن میں یہ بھی واضح کیا گیا کہ حج بدل کی نیت کرنے والے افراد کو بھی نجی حج اسکیم کے تحت سعودی عرب کا سفر کرنا ہوگا۔

بریفنگ کے دوران مذہبی امور کے وفاقی وزیر نے بتایا کہ حکومتی اسکیم کے تحت حج ادا کرنے والوں کی تعداد میں 300 فیصد سے زائد اضافہ ہوا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ سال 2013 میں 86919 اضافی افراد نے اسکیم سے فائدہ اٹھایا جبکہ سال 2016 میں یہ تعداد 280617 تک جا پہنچی ہے۔ وزیر اعظم نے وزارت مذہبی امور کی کارکردگی کو سراہتے ہوئے کہا کہ اس سال ملنے والے اضافی کوٹے کو مدنظر رکھتے ہوئے مزید بہتر انتظامات کیے جائیں۔ انہوں نے ہدایات جاری کیں کہ پاکستانی عازمین حج کو منیٰ، عرفات اور مزدلفہ میں تین وقت کا کھانا روز فراہم کرنے سے متعلق بھی حکمت عملی طے کی جائے۔

فیس بک پر تبصرے



تبصرہ کریں