مسرور ترین ممالک میں ناروے سرفہرست

اقوام متحدہ نے دنیا کے مسرور ترین ممالک کی سالانہ فہرست جاری کردی ہے جس میں ناروے سرفہرست ہے۔ اس رپوٹ سے پتہ چلا ہے کہ امریکیوں میں خوشی کا پیمانہ کم ہورہا ہے جبکہ برطانیہ پاکستان سمیت کئی ممالک میں صورتحال بتدریج بہتری کی جانب گامزن ہے۔

گزشتہ سال مسرور ترین ممالک کی فہرست میں ناروے چوتھے نمبر پر موجود تھا لیکن اس مرتبہ نارے ونے ڈینمارک، آئس لینڈ اور سوئٹزرلینڈ کو پیچھے چھوڑتے پہلا درجہ حاصل کیا ہے۔ اس کی بنیادی وجہ ناروے کی اقتصادی صورتحال بتائی جاتی ہے جو عالمی سطح پر خام تیل کی قیمتوں میں کمی کے باوجود خاصی مستحکم ہے۔

اس رپورٹ سے یہ بھی پتہ چلا ہے کہ امریکا میں رہنے والوں کی آمدنی گزشتہ دہائی کے مقابلے میں کہیں زیادہ ہوچکی ہے تاہم ان میں خوشی کی مسلسل شرح گر رہی ہے۔ مسرور ترین ممالک کی فہرست میں امریکا 14ویں نمبر پر جا پہنچا ہے۔ یورپی یونین سے انخلا اور سیاسی عدم استحکام جیسے معاملات میں گھرے ہوئے ملک برطانیہ کی پوزیشن بہتر ہوئی ہے اور اب وہ 23ویں سے 19ویں نمبر پر پہنچ گیا ہے۔

جنوبی ایشیا کے مسرور ترین ممالک پر نظر ڈالیں تو فہرست میں 80ویں نمبر پر موجود پاکستان سب سے آگے ہے جبکہ بھوٹان 97، نیپال 99، بنگلہ دیش 110، سری لنکا 120 اور بھارت 122ویں نمبر پر موجود ہے۔ علاوہ ازیں متحدہ عرب امارات 21، سعودی عرب 37، چین 79، ایران 108 اور افغانستان کا نمبر 140 ہے۔

اس فہرست کو تیار کرتے ہوئے گزشتہ 6 سالوں کے دوران 155 ممالک کے شہریوں کی آمدنی اور متوقع زندگی کے ساتھ ساتھ سماجی تعاون، شخصی آزادی، بدعنوانی اور سخاوت کے بارے میں لوگوں کے تاثرات بھی جانچے گئے۔ اقوام متحدہ کی جانب سے پہلی مرتبہ یہ رپورٹ 2012 میں شائع کی گئی تھی۔

دنیا کے 10 مسرور ترین ممالک
1: ناروے
2: ڈینمارک
3: آئس لینڈ
4: سوئٹزرلینڈ
5: فن لینڈ
6: ہالینڈ
7: کینیڈا
8: نیوزی لینڈ
9: آسٹریلیا
10: سویڈن

دنیا کے 10 رنجیدہ ترین ممالک
146: یمن
147: جنوبی سوڈان
148: لائبیریا
149: گنی
150. ٹوگو
151. روانڈا
152. شام
153. تنزانیہ
154. برنڈی
155. جمہوریہ وسطی افریقہ

فیس بک پر تبصرے



تبصرہ کریں