بلاگز

ہارون الرشید - ایک محبّ وطن صحافی، ایک مینارہِ نور

ہارون الرشید صاحب اپنی علمیّت، تجربہ و مشاہدہ اور زبان و بیان پر غیر معمولی قدرت کی بنا پر صحافتی برادری کے سرخیل اور بلاشبہ دنیائے صحافت کی شان ہیں۔ آپ کا شعری ذوق بھی نہایت اعلیٰ ہے اور شعر فہمی درجہ کمال کو پہنچی ہوئی۔ سحر آگیں نثر کو بہ تسلسل نبھائے چلے جانے

Read More

میرا کیا بنے گا...!!!

چین میں مسلمانوں کی تاریخ سیکڑوں سالوں پر محیط ہے... اسلام اس سرزمین پر ابتدائی طور پر مبلغین اور تاجروں کی کوششوں سے پھیلا تھا... اس پھیلاؤ کو سب سے زیادہ وسعت وسط ایشیا کے ان مسلمان جنگجوؤں کے ذریعے ملی جنھیں مختلف ادوار میں چینی حکمران اپنے مخالفین کا مقابلہ کرنے کے لیے بلاتے

Read More

اپنی لگن کی دنیا میں مگن (2)

یہ تحریر گزشتہ کالم سے پیوستہ ہے۔ بات مارک ٹوین کے ایک دل نشیں بیان پر ختم ہوئی تھی کہ: ”انسان کی زندگی میں دو ہی دن اہم ہیں، اہم ترین: جس دن آپ پیدا ہوئے۔ پھر جس دن آپ نے جانا کہ کیوں پیدا ہوئے۔“ خود شناسی جسےسقراط نے دانائی کا نقطہِ آغازقرار دیا،

Read More

خدارا کراچی کو اس کا حق دیجیے!

کیا جنرل راحیل شریف، چودھری نثار اور وزیرِ اعلیٰ سندھ کے حالیہ بیانات اور اقدامات کراچی کے رستے زخموں پر مرہم رکھ سکیں گے؟ دو کروڑ کی آبادی والے اس شہر میں امن و امان کے مسئلے کے علاوہ اور بھی ہزاروں مسائل اور مشکلات ہیں جو اس کے رقبے اور حجم کے ساتھ ساتھ

Read More

عورت کے مجرم !

عدیل احمد آزاد بلاگر، فاضل جامعۃ الازہر (مصر) مذہب کا بیانیہ وہ نہیں جو پھیلادیا گیا۔ اور انسانیت کے خیر خواہ وہ نہیں، جن کی چرب زبانی خدا، رسول کی منکر ہے۔ جنگ محض برتری کی ہے اور زعم تفاخرِ علمی کا۔ سو پڑھنے والوں کے رگ و پے میں نفرت و اشتعال کا زہر

Read More

بھوکے گدھ...

رضوان اللہ خان بلاگر یہ غالباً 2012ء کا وسط تھا۔ میں گلبرگ میں واقع جس آفس میں بیٹھا تھا، وہ ایک نجی چینل سے منسلک ایک صاحب (میں انہیں شاہ جی کہا کرتا تھا، اوریجنل نام مخفی) کا تھا۔ شاہ جی مجھے چھوٹا بھائی کہا کرتے تھے اور ان دِنوں وہ بے تاب تھے کہ

Read More

طیب اردگان کی روس اور اسرائیل سے مفاہمت، ایک جائزہ

سجاد سلیم بلاگر ترکی کے صدر طیب اردگان اس وقت بلاشبہ مسلمانوں کے سب سے مضبوط، غیرتمند اور ہمت والے لیڈر ہیں، جنھوں نے دنیا میں ہر قسم کے ظلم کے خلاف مضبوط آواز اٹھائی۔ ترکی کے عوام نے بھی ہر انتخاب میں ان کی پالیسیوں پر مہر لگائی۔ یہ اردگان کی ہی حکمت سے

Read More

گندی سوچ گندی نظر کا طعنہ اور لبرل و سیکولر امریکا و یورپ کی حقیقت

شمس الدین امجد بلاگر، کالم نگار پاکستان میں جب بھی شرم و حیا اور اسلامی تعلیمات کے مطابق زندگی گزارنے کی بات کی جاتی ہے تو لبرل و سیکولر لابی کی جانب سے بالعموم اعتراض نما طعنہ دیا جاتا ہے کہ مسئلہ شرم و حیا یا لباس کا نہیں، گندی نظر اور گندی سوچ کا

Read More

اپنی دنیا کی لگن میں مگن

یہاں تھکن، بیزاری، کوفت، بوریت ایسے بے سرے لفظوں کا راج نہیں۔ کچھ چھن جانےکا خوف نہیں۔ یہاں فنا کا گزر نہیں۔ tomorrowکا اندیشہ نہیں کہ یہاں آمادگی ہے۔ لطف ہے، چلتے رہنے کا جذبہ ہے۔ نہ اکتانے، نہ تھکنے کا سروراور نشہ ہے۔ کچھ کیے کی پذیرائی کا یقین ہے، اور یہ نشاط آمیز

Read More

متنازع اشتہار اور جناب اوریا مقبول جان

بعض اوقات ایسا ہوتا ہے کہ آپ کوئی موقف اختیار کرنا چاہ رہے ہوتے ہیں، مگر کوئی دوسرا اچانک اسی ایشو پر ایسے جارحانہ انداز سے کوئی موقف اپناتا اور گفتگو اتنے ہائی ٹمپریچر پر لے جاتا ہے کہ آپ بھونچکے رہ جاتے ہیں۔ اس شدت پر جا کر کوئی سٹینڈ لینے کے آپ حق

Read More

اوریا مقبول جان اور انصار عباسی، میڈیا کے چمکتے دمکتے ستارے

فضل ہادی حسن بلاگر یہ 2011ء کی بات ہے۔ نیشنل پریس کلب اسلام آباد میں ایک مذاکرہ کے دوران چند صحافی حضرات نے انصار عباسی صاحب کے بارے میں سخت ریمارکس کہے تھے۔ چند ایک نے اوریا صاحب کو نان پروفیشنل صحافی اور اہل صحافت میں نہ ہونے کی بات کی جبکہ بعض کافی ناراضگی

Read More

اوریا کی اوریانیت کے دفاع میں

ہمایوں مجاہد تارڑ بلاگر وجاہت مسعود صاحب کی مشہور ویب سائٹ ”ہم سب“ پر یکے بعد دیگرے ابھرتی تحریروں کا ایک تانتا سا بندھا ہے جو اوریا مقبول جان کے کالم ”پراڈکٹ“ کا محاسبہ کرنے کے درپے ہیں۔ مجھے شکوہ ہے کہ ”ہم سب“ کی یہ سب تحریریں خاصی مبالغہ پر مبنی، احترام اور شائستگی

Read More

کچھ خواتین کے حقوق کے بارے میں

”دوسرے بعض ایشوز کی طرح خواتین کے حقوق کا معاملہ بھی ہمارے ہاں دو انتہائوں میں بٹا ہوا ہے۔ ایک طرف وہ ہیں جو مغربی اخلاقیات کی عینک لگاکر ہر معاملے کو دیکھتے ہیں، خواتین کے حوالے سے بھی یہ لوگ وہی اقدار اور ٹرینڈز پاکستان میں نافذ کرنا چاہتے ہیں جو امریکا اور یورپ

Read More

اوریا مقبول ، ٹی وی اشتہار اورحضرت ٹوٹے نواز

سنا ہے خاص مشرقی ساکھ اور شہرت رکھنے والے صحافی اوریا مقبول جان صاحب نے ٹی وی پر چلنے والے ایک اشتہار میں پیش کی گئی کسی خاتون کے ایکشن پر اپنے پروگرام ”حرفِ راز“ میں اعتراض کرتے ہوئے ناظرین کی توجہ مبذول کروائی ہے۔ جس کے جواب میں ”ڈان نیوز“ نے آتش فشاں جوابی

Read More

جامعہ حقانیہ کو دی گئی امداد۔۔۔ ایک جائزہ

آصف محمود کالم نگار، اینکر تحریک انصاف کی صوبائی حکومت کی جانب سے دارالعلوم حقانیہ کو دی گئی امداد زیر بحث ہے اور سوال اٹھ رہاہے کیا اس امداد کا کوئی جواز موجود تھا؟ ہر دو اطراف میں مورچے قائم ہوچکے ہیں اور جنگجو اپنے اپنے مورچے میں داد شجاعت دے رہے ہیں۔ سیکولر حضرات

Read More

پاکستان ، جو ابھی دریافت نہ ہوسکا!

دنیا پاکستان کیا دیکھے گی کہ ہم پاکستانیوں نے بھی اپنا پاکستان کہاں دیکھا ہے؟ گہر صدف کے اندر ہوتے ہیں اور جس نے کبھی صدف نہیں چیرا، اسے خبرہی کیا کہ اسی بے چہرہ اوربے مول سیپ کے اندر کیا کیا انمول اور پاکیزہ موتی دمکا اور دہکا کرتے ہیں۔ ہاں یہ ہر گز

Read More

قادیانیت: مکالمہ کہ مطاعمہ ؟

رعایت اللہ فاروقی رعایت اللہ فاروقی تحریر کی دُنیا میں تعارف کے محتاج نہیں۔ طویل عرصے سے صحافت سے وابستہ ہیں، جبکہ کالم نگاری میں اپنے منفرد اسلوب کے سبب پہچانے جاتے ہیں۔ فیس بک پر خاصے فعال رہتے ہیں۔ چاہنے اور پڑھنے والوں کا ایک بڑا حلقہ رکھتے ہیں۔ آپ اردو ٹرائب ڈاٹ کام پر

Read More

جاوید احمد غامدی: شخصی تاثر اور عملی کردار

بات یہ ہے کہ غامدی صاحب کی شخصی خوبیاں اور علم و اخلاق فی زمانہ اس قدر نایاب ہے کہ اس کے لیے انہیں سو خون بھی معاف کیے جاسکتے ہیں اور ہر قیمت پہ ان کی تحسین کی جانی چاہیے، سوائے ایمان اور حمیت کی قیمت کے۔ میرا تاثر ہے کہ ان کے ہاں اس علمیت

Read More

سوال کیوں اُٹھائے جا رہے ہیں؟

یہ پانچ چھ سال پہلے کا واقعہ ہے۔ اسلام آباد میں ایک جرمن پروفیسر سے خاصی تفصیلی نشست کا موقع ملا۔ گورے اگر جرمنی، فرانس، ہالینڈ وغیرہ کے ہوں تو میرے جیسے لوگوں کے لیے آسانی رہتی ہے کہ ان کی انگریزی بھی عام طور پر گئی گزری ہی ہوتی ہے۔ یوں ہم لوگ زیادہ

Read More

فیس بک پر میری موجودگی کے تین مقاصد

رعایت اللہ فاروقی رعایت اللہ فاروقی تحریر کی دُنیا میں تعارف کے محتاج نہیں۔ طویل عرصے سے صحافت سے وابستہ ہیں، جبکہ کالم نگاری میں اپنے منفرد اسلوب کے سبب پہچانے جاتے ہیں۔ فیس بک پر خاصے فعال رہتے ہیں۔ چاہنے اور پڑھنے والوں کا ایک بڑا حلقہ رکھتے ہیں۔ ان کی یہ تحریر کچھ ذاتی

Read More